نواز شریف نے چیئرمین سینیٹ کیلئے پھر بلوچستان کے حق میں رائے دی، مریم نواز

Rate this post

وفاق کی علامت نوازشریف نے کھبی کسی صوبے کو محرومی کا احساس نہیں ہونے دیا، مریم نواز — فوٹو: فائل

پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ تمام صوبوں کو ساتھ لے کر چلنے والے نواز شریف نے پہلے بھی بلوچستان میں حکومت کی قربانی دی، اب چیئرمین سینیٹ کیلئے پھر بلوچستان کے حق میں رائے دی۔

اپوزیشن نے حاصل بزنجو کو چیئرمین سینیٹ کا متفقہ امیدوار نامزد کردیا
سابق وزیراعظم نوازشریف نے مسلم لیگ (ن) کی جانب سے حاصل بزنجو کو اپوزیشن کا متفقہ امیدوار نامزد کیا تھا

نوازشریف سے جیل میں ملاقات کے بعد اپنے بیان میں مریم نواز نے کہا کہ وفاق کی علامت نوازشریف نے کبھی کسی صوبے کو محرومی کا احساس نہیں ہونے دیا۔
مسلم لیگ ن کے صدر شہبازشریف اور مریم نواز نے کوٹ لکھپت جیل میں نواز شریف سے ملاقات کی۔ شریف فیملی کے افراد نے جیل میں نوازشریف کے ساتھ وقت گزارا۔

ملاقات کے بعد مریم نواز نے سوشل میڈیا پربیان جاری کیا کہ وفاق کی علامت نوازشریف نے کبھی کسی صوبے کو محرومی کا احساس نہیں ہونے دیا، صوبوں کو ساتھ لے کر چلنے والے نواز شریف نے پہلے بھی بلوچستان میں حکومت کی قربانی دی اور اب بھی چیئرمین سینیٹ کیلئے پھر بلوچستان کے حق میں رائے دی۔
خیال رہے کہ اپوزیشن کی قائم کردہ رہبر کمیٹی نے نئے چیئرمین سینیٹ کیلئے حاصل بزنجو کا نام تجویز کیا ہے اور ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف نے اپنی پارٹی کی طرف سے حاصل بزنجو کو چیئرمین سینیٹ کا متفقہ امیدوار نامزد کرنے کی منظوری دی تھی۔
واضح رہے کہ اپوزیشن نے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کی تبدیلی کے تحریکِ عدم اعتماد سینیٹ سیکریٹریٹ میں جمع کرادی ہے جس پر اپوزیشن کے 44 ارکان کے دستخط ہیں۔
اپوزیشن کی جانب سے چیئرمین سینیٹ کے لیے امیدوار حاصل بزنجو بلوچستان سے تعلق رکھتے ہیں اور وہ نیشنل پارٹی کے صدر ہیں جب کہ ان کی جماعت کی سینیٹ میں 5 نشستیں ہیں۔

تبصرے
Loading...

اس ویب سائٹ پر آپ کے تجربے کو بہتر اور سہل بنانے کے لیے کوکیز استعمال کی جاتی ہیں۔ اگر آپ کوکیز کے استعمال سے مطمئن ہیں تو قبول ہے کہ بٹن پر کلک کیجئے قبول ہے